امریکی تیراک انیتا الوارز سوئمنگ کے دوران بے ہوش، کوچ نے پُول کی تہہ سے نکالا

امریکہ کی مشہور آرٹسٹک تیراک انیتا الوارز سوئمنگ ورلڈ چیمپیئن شپ کی تیاری کے دوران بے ہوش ہو کر پول کی تہہ میں چلی گئیں، تاہم ان کی کوچ نے فوری طور پر کُود کر انہیں بچا لیا۔فرانسیسی خبر رساں ادارے اے ایف پی کے مطابق واقعہ بوداپسٹ کے پول میں بدھ کی رات اس وقت پیش آیا جب سولو فری فائنل کے لیے پریکٹس کر رہی تھیں کہ اچانک انیتا الوارز کی سانس بند ہو گئی۔انیتا الوارز کے پانی میں ڈبکی لگا کر چند منٹ تک نہ ابھرنے پر کوچ اینڈریا فیوینٹس کو خطرے کا احساس ہوا تو انہوں نے پول میں چھلانگ لگا دی اور جب انیتا کو نکالا گیا اس وقت وہ بے ہوش تھیں۔فیونٹیس نے مرکا نامی سپینش اخبار کو بتایا ’یہ بہت خوفناک تھا، میں نے اس لیے چھلانگ لگائی کیونکہ لائف گارڈز موجود نہیں تھے۔‘فیونٹیس نے اس وقت شارٹز اور ٹی شرٹ پہن رکھی تھی اور اسی حالت میں انہیں ہنگامی طور پر کودنا پڑا، وہ انیتا کو پانی کی سطح پر لائیں، جس کے بعد انہیں باہر نکالا گیا۔فیونٹیس کا یہ بھی کہنا تھا کہ ’میں اس وقت بہت ڈر گئی جب میں نے دیکھا کہ انیتا سانس نہیں لے پا رہیں، مگر اب وہ ٹھیک ہیں۔‘انیتا کو پول کے میڈیکل سینٹر میں لے جایا گیا تو اس کے تھوڑی دیر بعد وہاں ان کے مداح بھی جمع ہو گئے۔بعد ازاں امریکہ کی سوئمنگ ٹیم کی جانب سے بیان جاری کیا گیا کہ ان کی طبعیت ٹھیک ہے۔

رپورٹ کے مطابق طبی امداد دیے جانے کے بعد انیتا الوارز کی طبعیت ٹھیک ہے (فوٹو: اے ایف پی)

فیونٹیس، جو چار مرتبہ اولمپکس میں میڈل جیت چکی ہیں، نے سپینش ریڈیو سے گفتگو میں بتایا کہ انیتا کے بے ہوش کی وجہ یہ تھی کہ اس روز انہوں نے معمول سے بڑھ کر پریکٹس کی تھی۔

’ان کے پھیپھڑوں میں پانی بھر گیا تھا، تاہم جب ان کی سانس بحال ہوئی تو ان کی حالت بہتر ہوتی چلی گئی۔‘ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ وہ انیتا کو بچانے کے لیے اس قدر تیزی سے گئیں، جس قدر وہ جا سکتی تھیں جیسے یہ اولپمک کا کوئی فائنل ہو۔انیتا نے جمعرات کو مکمل آرام کرنے کا پروگرام بنایا ہے جبکہ وہ جمعے کو ہونے والے ایونٹ میں شرکت کرنے کے لیے پرامید ہیں۔25 سالہ انیتا الوازر تیسری ورلڈ چیمپیئن شپ میں شرکت کر رہی ہیں۔ اس سے قبل وہ پچھلے سال بارسلونا کے اولمپک کوالیفائر راؤنڈ میں بھی بے ہوش ہوئی تھیں۔

Source

Leave a Reply

Your email address will not be published.

1 × one =

Back to top button