این اے 33 ہنگو میں تحریک انصاف نے میدان مارلیا

غیرحتمی اور غیرسرکاری نتائج کے مطابق قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 133 ہنگو میں پاکستان تحریک انصاف نے میدان مارلیا۔

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 33 پر ضمنی انتخاب کے لیے پولنگ کا وقت 5 بجے ختم ہونے کےک بعد گنتی کا عمل شروع ہوا ، جس کے بعد نتائج کا سلسلہ شروع ہوا۔غیر سرکاری اور غیر حتمی نتائج کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کے امیدوار ندیم خان 21 ہزار 583 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے ہیں جب کہ جمعت علمائے اسلام کے امیدوار مفتی عبید 17 ہزار 153 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔این اے 33 میں ضمنی انتخاب کے لیے پولنگ کا عمل صبح 8 بجے شروع ہوا جو شام 5 بجے تک بلا تعطل جاری رہا۔ ہنگو میں قومی اسمبلی کی نشست کے لیے پی ٹی آئی، جے یو آئی (ف) اور اے این پی کے درمیان سخت مقابلہ تھا۔این اے 33 میں رجسٹرڈ ووٹرز کی کل تعداد 3 لاکھ 14 ہزار 77 ہے، جن کے لئے 210 پولنگ اسٹیشنز قائم کئے گئے ہیں جن میں سے مردوں کے لئے 65 ، خواتین کے لئے 55 جب کہ 91 دونوں کے لیے ہیں جب کہ 110 پولنگ اسٹیشنز کو حساس اور 77 حساس ترین قرار دیا گیا تھا۔پولنگ کے دوران کسی بھی ناخوشگوار واقعے سے نمٹنے کے لیے سیکیورٹی کے خاطر خواہ انتظامات کئے ہیں، پولنگ اسٹیشنز کے اندر اور باہر سی سی ٹی وی کیمرے نصب کئے گئے تھے۔واضح رہے یہ نشست تحریک انصاف کے ایم این اے حاجی خیال کے انتقال بعد خالی ہوئی تھی اور پی ٹی آئی نے اس نشست کے لیے حاجی خیال کے بیٹے کو ٹکٹ جاری کیا جب کہ قومی اسمبلی سے مستعفیٰ ہونے کے بعد پی ٹی آئی کا یہ پہلا انتخابی  معرکہ تھا۔ Double Click 300X250

Source

Leave a Reply

Your email address will not be published.

12 − two =

Back to top button