سعودی عرب میں نیا شہر بسانے کا اعلان

شہزادہ محمد بن سلمان نے سعودی عرب میں دنیا کا پہلا غیرمنافع بخش شہر بسانے کا اعلان کردیا۔سعودی پریس ایجنسی (ایس پی اے) کے مطابق یہ شہر عالمی سطح پر غیرمنافع بخش شعبے کیلئے ترقی کی مثال اور نوجوانوں و رضاکار گروپوں کے ساتھ ساتھ مقامی اور بین الاقوامی غیرمنافع بخش اداروں کیلئے ترقی کے عمل کی ایک تجربہ گاہ ثابت ہوگا۔ کے مطابق سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے کہا کہ یہ اپنی نوعیت کا پہلاغیر منافع بخش شہر ہوگا، جو مسک فاؤنڈیشن کے اندرونی آپریشن کے تصور کو واضح کرے گا۔مسک فاؤنڈیشن شہزادہ محمد بن سلمان کا قائم کردہ ایک غیر منافع بخش ادارہ ہے، جو 2011ء میں قائم ہوا تھا اور اس کا مقصد سعودی عرب میں تعلیم کا فروغ ہے۔ان کا کہنا ہے کہ یہ منصوبہ ایسی سروسز مہیا کرے گا جو شہر کی طرف مائل افراد کیلئے پُرکشش ماحول پیدا کرنے میں معاون ثابت ہوں گی۔رپورٹ کے مطابق شہر سعودی ولی عہد کے نام سے منسوب ہوگا، شہزادہ محمد بن سلمان نان پرافٹ سٹی ڈیجیٹل ٹوئن ماڈل پر عمل پیرا ہوگا، اس میں اکیڈمیاں، کالج، مِسک اسکول، کانفرنس سینٹر، سائنس میوزیم اور تخلیقی مراکز قائم کئے جائیں گے، جو سائنسی علوم اور نئے دور کی ٹیکنالوجی جیسے مصنوعی ذہانت (اے آئی)، آئی او ٹی اور روبوٹکس میں جدت پسندوں کے عزائم کی تکمیل کیلئے جگہ مہیا کرے گا۔اس شہر میں آرٹس اکیڈمی اور آرٹس گیلری بھی تعمیر کی جائے گی، جس میں آرٹ تھیٹر، پلے ایریا، کوکنگ اکیڈمی اور مربوط رہائشی کمپلیکس شامل ہوں گے۔یہ منصوبہ ولی عہد کی طرف سے وقف اراضی پر وادی حنیفہ سے متصل علاقے ارقہ میں تعمیر کیا جائے گا، جو 3.4 مربع کلو میٹر پر پھیلا ہوا ہوگا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.

9 + 10 =

Back to top button