سندھ ہائی کورٹ؛ لاپتا شہری ٹرائل کورٹ کے سامنے پیش

پولیس نے عدالتی حکم پر لاپتا شہریوں ٹرائل کورٹ کے سامنے پیش کردیا۔ 

تفصیلات کے مطابق سندھ ہائیکورٹ لاپتا شہریوں سے متعلق درخواستوں کی کی سماعت ہوئی۔پولیس نے عدالت کے سامنے چارلاپتا شہریوں کی مختلف مقدمات میں گرفتاری ظاہرکرتے ہوئے پولیس نے جمیل احمد، نوید احمد، صادق اور شاہ محمد کو ٹرائل کورٹ میں پیش کردیا۔پولیس نےعدالت کا آگاہ کیا کہ لاپتا شہری دانش گھرواپس آگیا جس کے بعد عدالت نے پانچوں شہریوں کی گمشدگی سے متعلق درخواستیں نمٹادیں۔درخواستوں کی سماعت جسٹس محمد اقبال کلہوڑو کی سربراہی میں دو رکنی بینچ نے کی۔یہ خبر بھی پڑھیںسندھ ہائیکورٹ میں انارہ گارڈن اسکیم 33 کے اطراف میں سڑکوں پر بڑے پیمانے پر قبضے سے متعلق کیس کی بھی سماعت ہوئی۔اہم سٹرکوں پرعبداللہ شاہ غازی گوٹھ بنانے کے خلاف درخواست کی سماعت مین عدالت نے  زمین واگزارکرانے کے لیے 17 مئی کو دوبارہ آپریشن کرنے کی ہدایت کر دی۔نمائندہ ڈپٹی کمشنر پولیس حکام کے ہمراہ عدالت میں پیش اور بتایا کہ عدالتی احکامات پر آپریشن کیا گیا۔ کچھ عرصے سے قبضے ختم کرائے گئے۔نمائندہ ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ مزاحمت کے باعث آپریشن کو مؤخر کرنا پڑا۔عدالت نے ریمارکس دیے کہ یہ بتائیں، یہاں قبضے کیسے ہو جاتے ہیں؟ جب قبضے ہو رہے ہوتے ہیں تو کارروائی کیوں نہیں کرتے؟عدالت نے ہدایت کی کہ مکمل قبضوں کے خاتمے تک آپریشن جاری رکھیں۔ Double Click 300X250

Source

Leave a Reply

Your email address will not be published.

17 + 5 =

Back to top button