سورج سے خارج ہونے والے پلازما زمین سے کب ٹکرائے گا؟

سورج سے بڑے پیمانے پر خارج ہونے والا پلازما زمین کی جانب رواں دواں ہیں جو ممکنہ طور پر جمعرات کو زمین سے ٹکرائے گا۔

یہ کورونل اخراج، جو ہمارے سورج کی جانب سے جاری کیا گیا پلازما اور مقناطیسی توانائی ہے، سورج پر موجود AR2987 نامی ایک دم توڑتے سن اسپاٹ سے آئے گا۔سورج کی سطح پر موجود ٹھنڈے علاقوں کو سن اسپاٹ کہا جاتا ہے، جو طاقتور مقناطیسی فیلڈ کے درجہ حرارت کی منتقلی کے عمل میں مدخل ہونے کی وجہ سے وجود میں آتے ہیں۔AR2987 نے 11 اپریل کو سی کلاس شمسی لپٹوں کا اخراج کیا ہے۔اس اخراج کا زمین سے 14 اپریل کو ٹکرانا متوقع ہے اور اس کے سبب جیومیگنیٹک طوفان آسکتا ہے۔اگرچہ اس اخراج کو معتدل قرار دیا گیا ہے۔اس جیو میگنیٹک طوفان سے ہمارے سیارے پر پاور سسٹمز والٹج الارم سے گزر سکتے ہیں، اسپیس کرافٹ کھچاؤ میں مبتلا ہو سکتے ہیں اور یہ بھی ممکن ہے کہ نیو یارک اور اِڈاہو جیسے شہروں میں اورورا دیکھنے کو ملے۔فی الوقت سورج کی شمسی فعالی بڑھ گئی ہے جو اس کے شمسی چکر کا حصہ ہے۔ یہ عمل 11 سال تک جاری رہتی ہے اور اس کو شعاؤں کے اخراج کے طور پر بیان کیا جاتا ہے۔ Adsence Ads 300X250

Source

Leave a Reply

Your email address will not be published.

eleven − 10 =

Back to top button