فیس بک کی یورپ میں بڑی فتح

آسٹریا کی ایک اینٹی ٹرسٹ کورٹ نے فیس بک کے اینیمیٹڈ تصاویر کے پلیٹ فارم Giphy کی خرید کو شرائط کے ساتھ منظوری دے دی۔

فیس بک نے Giphy، جفس بنانے والی ویب سائٹ، کو 2020 میں 31 کروڑ 50 لاکھ ڈالرز میں خریدا تھا تاکہ اس کے آپریشن کو فوٹو-شیئرنگ ایپ انسٹاگرام کے ساتھ جوڑا جا سکے۔فیس بک، جس کی مرکزی کمپنی نے کچھ ہی عرصہ قبل اپنا نام بدل کر میٹا رکھا ہے، نے برطانیہ کے مسابقتی ادارے کے فیصلے کو چیلنج کیا ہے۔فیصلے میں کہا گیا تھا کہ فیس بک کو Giphy بیچ دینا چاہیئے کیوں کہ یہ ڈیل سوشل میڈیا پلیٹ فارمز کے مابین مقابلے اور اشتہارات کی تشہیر کو کم کر دے گی۔فیس بک کا کہنا تھا کہ آسٹرین فیصلہ، پہلی بار تھا جب ایک عدالت ڈیل پر نظرِ ثانی کی۔ یہ ٹرانزیکشن یورپی یونین کی سطح پر دیکھنے کے لیے بہت چھوٹی ہے۔وفاقی مسابقتی اتھارٹی کی جانب سے لائے گئے کیس پر دیے گئے فیصلے کے متعلق ایک مختصر بیان میں عدالت نے کہا کہ عدالت نے اشتراک کو منع نہیں کیا، مخصوص شرائط پیش کیں جن کو پورا ہونا تھا۔میٹا کے ترجمان کا کہنا تھا کہ ہم آسٹرین عدالت کے فیصلے سے خوش ہیں۔ میٹا اور جِفی، جِفی کے پروڈکٹ کو لاکھوں لوگوں، کاروباروں، ڈیویلپرز اور اے پی آئی پارٹنر کے لیے بہتر کریں گے، ہر کسی کے لیے مزید انتخاب پیش کریں گے۔ Square Adsence 300X250

Leave a Reply

Your email address will not be published.

three × 5 =

Back to top button