لمبی قطار نہ طویل انتظار۔کیا واقعی اب پاکستان میں گاڑیاں فون سے بھی جلدی چارج ہونگی؟

کراچی: صدر کے علاقے میں الیکٹرک گاڑیوں کیلئے فاسٹ چارجنگ اسٹیشن کا افتتاح کردیا گیا، اسٹیشن میں 160 کلو واٹ فاسٹ چارجنگ کی صلاحیت ہے جو صرف 15 منٹ میں کاروں کو چارج کرتا ہے، ای وی اسٹیشن کا افتتاح جرمن سفیر کے ہمراہ ایڈمنسٹریٹر کراچی نے کیا۔

افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ایڈمنسٹریٹر کراچی مرتضی وہاب نے کہا کہ جن لوگوں کو مہنگائی کی وجہ سے پریشانی کا سامنا ہے ان کے لیے الیکٹرک وہیکل موزوں ہے، یہ ماحول دوست عمل بھی ہے۔

ہم رینیوبل انرجی کہ جانب بھی جارہے ہیں کیونکہ بچت کے ساتھ اس کے اور بھی بہت فائدے ہیں۔ ہمیں اپنا ذہن بنانے کی ضرورت ہے، اس طرح کے چارجنگ اسٹیشن بچت کا ذریعہ بن سکتے ہیں۔ سیمنز اور لبرا کو آفر کرتا ہوں کہ شہر کے مقامات کی نشاندہی کریں، ہم پبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ کے تحت اسٹیشن بناسکتے ہیں۔

سی ای اولبرا چارجنگ حب عبدالحسیب خان نے بتایا کہ چھوٹی الیکٹرک گاڑیاں 2ہزار جبکہ بڑی گاڑیاں 4 ہزار روپے میں چارج ہوسکیں گی، اس ٹیکنالوجی کو فروغ دینے کی ضرورت ہے، دنیا میں ٹیکنالوجی فروغ پارہی ہے، اس سے درآمدی بل میں کمی ہوگی اور سی این جی کے مسائل سے کسی حد تک چھٹکارا مل سکے۔

اس موقع پر سی ای او سیمنز مارکس اسٹو مائیر کا کہنا تھا کہ کہ یہ الیکٹرک کاریں پاکستان کے لیے نئی تھیں، آج یہاں یہ افتتاح ہونا بہت بڑا قدم ہے، اب لوگوں کو چارجنگ اسٹیشن پر دو سے تین گھنٹے نہیں دینے پڑیں گے۔

مارکس اسٹومائیر نے کہا کہ اس بیٹری کی خاصیت ہے کہ یہ اچھا لائف ٹائم دے گی، ہائی ویز پر بھی ایسے اسٹیشن کی ضرورت ہے جبکہ لمبے سفر پر جانے والے بھی اس سے استفادہ کرسکتے ہیں۔

Source

Leave a Reply

Your email address will not be published.

14 + 17 =

Back to top button