پاستا، نوڈلز آپس میں کیوں مل جاتے ہیں؟

ایک تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ کس طرح اسٹارچ گرینول سے بنے پاستا کے پھولنے اور نرم ہونے کا تعلق پکانے کے دورانیے، پانی کے درجہ حرارت اور نمک کے ملانے سے ہے۔

یونیورسٹی آف اِلینوائے کے محققین نے پاستا کے مختلف پیرایوں پر پھولنے کے متعلق متعدد اِکوویشنز کو حل کیا۔یویورسٹی آف اِلینوائے میں ڈیپارٹمنٹ آف مکینیکل کے محقق ڈٓکٹر سامع توفیق کا کہنا تھا کہ نوڈلز کی خصوصیات کو پتہ لگانا اس مطالعے کا بنیادی مقصد تھا۔انہوں نے کہا کہ گزشتہ کچھ سالوں میں ہم نے یہ اس بات کے متعلق بہت مذاق کیا کہ پاستا نوڈلز کس طرح ہمارے کام سے تعلق رکھتا ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ ہمیں بعد میں محسوس ہوا کہ پکانے کے عمل کے دوران نوڈلز کے مکینیکی ٹیکسچر تبدیل ہوجاتا ہے اور محققین کے تجزیے یہ دِکھا سکتا ہے ان کے جُڑنے، مکینیکی ٹیکسچر اور اس کے پکنے کے درمیان تعلق ہے۔تحقیق میں ڈاکٹر توفیق اور ان کے ساتھیوں نے مشاہدہ کیا کہ جب کانٹے سے نوڈلز کو پلیٹ سے اٹھایا جاتا ہے تو وہ ایک ساتھ کیسے آتے ہیں۔اس سے محققین کو یہ معلوم ہوا کہ کس طرح پانی جذب ہونے سے پھولنے کی خصوسیت پاستا کے ٹیکسچر کو تبدیل کرتی ہے۔جب پاستا پکایا جاتا ہے تو نوڈلز کی لمبائی میں اضافے کی شرح 3.5 سے 1 سے بڑھتی، جب تک وہ نرم  اور ضرورت سے زیادہ پکائے جانے سے قبل چبائے جانے کی حالت میں نہیں آجاتے۔نوڈل کا کسی حد تک پکایا جانا اس کے اُس حصے کی لمبائی سے بلا واسطہ تعلق رکھتی ہے جو اس کے برابر والے نوڈل سے چپک جاتا ہے۔ڈاکٹر توفیق کا کہنا تھا کہ جس چیز نے محققین کو زیادہ حیرت میں ڈالا وہ یہ چیز ہے کہ ابلتے پانی میں نمک کے اضافے نے پکنے کے وقت کو مکمل طور پر تبدیل کردیا۔ Adsence Ads 300X250

Source

Leave a Reply

Your email address will not be published.

fifteen − three =

Back to top button