پاکستانی کرکٹر شاہین شاہ آفریدی نے ماڈلنگ شروع کر دی؟

فاسٹ بولر مخالف ٹیموں کی وکٹیں گرانے کے ساتھ ہر طرح کی کرکٹ میں پرفارم بھی کر رہا ہو تو عموما کرکٹ شائقین اس کی آن دی فیلڈ اور آف دی فیلڈ سرگرمیوں میں ضرور دلچسپی لیتے ہیں۔ ایسے میں اگر فاسٹ بولر ٹی ٹوئنٹی لیگ کی چیمپیئن ٹیم کا کپتان رہا ہو تو دلچسپی کا سامان کہیں بڑھ جاتا ہے۔

کچھ ایسا ہی معاملہ پاکستانی کرکٹر شاہین شاہ آفریدی کے ساتھ ہے جو اپنے کیریئر کی ابتدا میں ہی اپنے اونچے قد اور نپی تلی بولنگ کے ذریعے مخالف پلیئرز کی وکٹیں بکھیر کر کرکٹ فینز کی توجہ کا مرکز بنے ہیں۔سوشل میڈیا پر ایکٹو پاکستانی کرکٹرز میں شمار کیے جانے والے شاہین شاہ آفریدی نے بدھ کو اپنے ٹوئٹر اکاؤنٹ پر ذرا منفرد سے انداز کی ایک تصویر شیئر کی۔ اسے دیکھنے والوں میں سے کئی کو لگا کہ کرکٹر نے شاید پروفیشن بدل کر ماڈلنگ شروع کر دی ہے۔مختلف صارفین نے کہیں بالواسطہ اور کہیں واضح طور پر ان سے یہ استفسار کیا تو اکثر نے ان کے نسبتاً نئے انداز پر پسندیدگی کا اظہار بھی کیا۔ذیشان قیوم نے اپنے تبصرے میں براہ راست تعریف کے بجائے ان کے کرکٹ کیریئر کو موضوع بناتے ہوئے لکھا کہ ’سٹائل تو ایسے مارا ہے جیسے روہت شرما، کے ایل راہل اور وراٹ کوہلی کی وکٹیں ایک ہی میچ میں لی ہوں۔‘انڈیا کے خلاف کھیلے گئے ایک میچ میں شاہین شاہ آفریدی نے مخالف ٹیم کے تینوں اہم پلیئرز روہت شرما، وراٹ کوہلی اور کے ایل راہل کو آؤٹ کیا تھا۔اسی دوران ساتھی کرکٹر شاداب خان نے بھی ان سے سوال پوچھ ڈالا کہ ’ماڈلنگ کب سٹارٹ کی؟‘جواب میں پاکستانی سپیڈ سٹار نے ماڈلنگ شروع کرنے کی تاریخ تو نہیں بتائی البتہ یہ ضرور لکھا کہ ’بھائی آپ سے سیکھنے کی کوشش کر رہا ہوں۔‘تصویر دیکھ کر کچھ ٹویپس کو ’خود پسندی‘ کی خو آئی تو ایسے افراد نے فورا انہیں باز رہنے کا مشورہ دے ڈالا۔ذوالفقار لغاری نے اپنے تبصرے میں لکھا کہ ’آپ کی وہ تصاویر چاہییں جن میں آپ کی بولنگ پہ وکٹیں اڑتی اور ٹوٹتی نظر آئیں۔‘22سالہ شاہین شاہ آفریدی نے پاکستان کی جانب سے ون ڈے کیریئر کا آغاز ستمبر 2018 جب کہ ٹیسٹ ڈیبیو دسمبر 2018 میں کیا ہے۔ وہ اب تک قومی ٹیم کی جانب سے 24 ٹیسٹ، 30 ون ڈے اور 40 ٹی ٹوئنٹی میچ کھیل چکے ہیں۔پاکستانی کرکٹر صرف مقامی فینز کی جانب سے ہی نہیں سراہے جاتے بلکہ بین الاقوامی سطح پر بھی کرکٹ ماہرین ان کی کارکردگی کے معترف دکھائی دیتے ہیں۔سابق انگلش کرکٹر ڈیرف گف نے حال ہی میں شاہین شاہ آفریدی کی کارکردگی کو سراہتے ہوئے کہا ہے کہ ’عمدہ ٹیلنٹ کے مالک شاہین کامیابیوں کی تلاش میں رہتے ہیں۔ اپنے بھرپور توانائی کے ساتھ انہوں نے لاہور قلندرز کی کپتانی کی۔ میرا خیال ہے وہ مستقبل میں پاکستانی ٹیم کے کپتان ہوں گے۔‘

Source

Leave a Reply

Your email address will not be published.

4 + five =

Back to top button