گرین لینڈ میں پگھلنے والی برف نے سمندر کی سطح میں کتنا اضافہ کیا؟

ایک نئی تحقیق میں ماہرین نے خبردار کیا ہے کہ گرین لینڈ میں گزشتہ دو دہائیوں میں 4700 گِیگا ٹن برف پگھلی ہے جو امریکا کو 1.5 فِٹ پانی کے اندر کرنے کے لیے کافی ہے۔

یہ معلومات گریویٹی ریکوری اینڈ کلائمیٹ ایکسپیریمنٹ سیٹلائیٹس (GRACE)کے جانب اپریل 2002-اگست 2021 تک جمع ہونے والے ڈیٹا کا ڈینش تجزیے کے بعد حاصل ہوئی۔محققین نے بتایا کہ اس پیمانے پر برف کے پگھلنے نے 2002 سے اب تک سطح سمندر کو 0.47 فی صد بڑھایا ہے۔یہ تحقیق ڈینش میٹرولوجیکل انسٹیٹیوٹ، نیشنل اسپیس انسٹیٹیوٹ، جیولوجیکل سروے آف ڈینمارک اور گرین لینڈ کے پولر پورٹل ویب سائیٹ کے ذعیرے سے سامنے آئی۔اپنی ویب سائیٹ پر محققین نے لکھا کہ ڈیٹا ظاہر کرتا ہے کہ زیادہ تر برف اِن برف کی چادروں کے کنارے سے پگھلی ہے۔انہوں نے بتایا کہ کناروں پر مشاہدات نے یہ بھی دِکھایا کہ برف پتلی ہورہی ہے، کھاڑیوں اور زمین پر موجود گلیشیئر پیچھے ہٹ رہے ہیں اور برف کی سطح سے بھی بڑے پیمانے پر برف پگھل رہی ہے۔تاہم، GRACE سیٹلائیٹس کے مطابق وسطی خطے میں برف میں معمولی اضافہ ہوا ہے۔دیگر پیمائشوں کے مطابق اس معمولی اضافے کی وجہ برفناری میں معمولی اضافہ ہے۔ناسا محققین کے مطابق برف کا پگھلنا خصوصی طور پر مغربی گرین لینڈ کے ساحل ہر شدید ہے، جہاں پانی کا بڑھتا درجہ حرارت گلیشیئرز کے پگھلنے کا سبب بن رہا ہے۔ Square Adsence 300X250

Leave a Reply

Your email address will not be published.

5 + 1 =

Back to top button